374

تلہ گنگ کو جھوٹے وعدوں اور دعوؤں کے ذریعے کھنڈرات میں تبدیل کرنے والوں کے چہرے اب عوام پہچان چکی ہے،تباہ حالی کے ذمہ دار لوگوں کو خادم اعلی تلہ گنگ اور مسیحاکا لقب دینا تلہ گنگ کی عوام کے ساتھ گھٹیا مذاق ہے ۔ملک شہزاد

تلہ گنگ (باسط اعوان سے)تحصیل تلہ گنگ کو جھوٹے وعدوں اور دعوؤں کے ذریعے کھنڈرات میں تبدیل کرنے والوں کے چہرے اب عوام پہچان چکی،تلہ گنگ کی تباہ حالی کے ذمہ دار لوگوں کو خادم اعلی تلہ گنگ اور مسیحاکا لقب دینا تلہ گنگ کی عوام کے ساتھ گھٹیا مذاق ہے

، یہ ہی مسیحا ہیں جن کی مسیحائی کی وجہ سے ہی اب تلہ گنگ کی عوام کو مرنے کے لیے بھی راولپنڈی جانا پڑتا ہے ، تلہ گنگ کی عوام جان چکی کہ خدمت کا دوسرا نام حافظ عمار یاسرہی ہے ،ملک شہزاد۔ تفصیلات کے مطابق رہنما پاکستان مسلم لیگ ق تلہ گنگ ملک شہزاد نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ 2013کے انتخابات میں ضلع تلہ گنگ کا جھوٹا وعدہ کرکے تلہ گنگ کی عوام جذبا ت سے کھیلنے والے اورتلہ گنگ کی تباہ حالی کے ذمہ دار ن لیگ کے رہنماؤں کو خادم اعلی تلہ گنگ اور مسیحاکا لقب دینا تلہ گنگ کی عوام کے ساتھ گھٹیا مذاق ہے ، عوام کے مسائل کو حل کرنے کو گناہ سمجھنے والوں اور اپنے کرپشن کے بے تاج بادشاہ آقاؤں کو خوش کرنے کے لیے اپنی تمام تر توانائیاں صرف کرنے والوں کو تلہ گنگ کی حالت زار کا خیال گزشتہ چار سال سے زائد عرصے میں برسراقتدار ن لیگ کی گود میں بیٹھے رہنے کے باوجود نہیں آیا اب جبکہ اقتدار ختم ہونے کو ہے تو اپنے مالشیوں کے ذریعے خود کو نام نہاد مسیحا اور خادم اعلی ثابت کرنے کی ناکام کوشش کی جا رہی مگرتحصیل تلہ گنگ کو جھوٹے وعدوں اور دعوؤں کے ذریعے گھنڈرات میں تبدیل کرنے والوں کے چہرے اب عوام پہچان چکی ہے اب کوئی خود کو خادم اعلی کہلوائے یا کہ نام نہاد مسیحا مگر تلہ گنگ کی عوام اب جان چکی ہے کہ خدمت کا دوسرا نام حافظ عمار یاسر ہی ہے جنہوں نے تلہ گنگ کی عوام کو سٹی ہسپتال تلہ گنگ ، سوئی گیس ، بجلی اور دیگر سہولیات اقتدار نہ ہونے کے باوجود فراہم کیں جبکہ خود کو مالشیوں کے ذریعے خادم اعلی اور مسیحا ثابت کرنے والوں نے عوام کو سہولیات فراہم کرنا گناہ سمجھ رکھا اور دوسروں کے کاموں پر عوام کو دھوکا دینے کے لیے تختیاں لگوانا اپنا فرض سمجھ رکھا ہے ، تلہ گنگ کی عوام سے جدید ترین سٹی ہسپتال چھیننے والے یہی مسیحا ہیں جن کی مسیحائی کی وجہ سے ہی اب تلہ گنگ کی عوام کو مرنے کے لیے بھی راولپنڈی جانا پڑتا ہے ، صرف عوام کو لو ٹ کھانے کی سکت رکھنے والوں کو آئندہ انتخابات میں انشاء اللہ برے طریقے سے شکست کا سامنا کرنا پڑے گا ۔، ان کا مزید کہنا تھا کہ اپنی یونین کونسل پر توجہ نہ دینے والوں اور کرپشن ثابت ہو جانے کے با وجود اپنے یونین کونسل کے سیکرٹری تک کے خلاف کوئی کاروائی نہ کرنے والوں کو نام نہاد خادم اعلی تلہ گنگ کی قصیدہ خوانی کرتے ہوئے شرم آنی چاہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں