264

بنیادی سہولیات سے محروم سابقہ حلقہ پی پی 23اپنی مختلف انداز میں منتخب ہونے ایم پی اے کی کارکردگی کا منہ بولتا ثبوت،حلقے کی عوام کو صرف کھلی آنکھوں سہانے خواب نصیب ہوئے۔تعریفی بیانات محبوب مشغلہ،عوامی حلقے

تلہ گنگ (اشفاق احمد بڈھیال )ضمنی الیکشن سابقہ حلقہ پی پی23کی الیکشن کمپین کے دوران ن لیگی قیادت کی طرف سے کئے گئے ترقیاتی کاموں کے وعدے ایفاء نہ ہوتے دیکھ کر عوامی حلقوں نے غم و غصہ پایا جانے لگا۔موجودہ ملکی حالات نے بھی عوام کو ترقیاتی کاموں کے حوالے سے مایوس کیا، سابقہ حلقہ پی پی 23کے ضمنی الیکشن میں ن لیگی حکومت نے سرکاری مشینری کا بے دریغ استعمال کرتے ہوئے عوام سے ترقیاتی کاموں کے وعدے توکئے گئے۔ لیکن ن لیگ کی بھاری اکثریت سے

جیت کے باوجود عوام سے کئے گئے وعدے ایفاء نہ ہوتے دیکھ کر عوامی حلقوں نے شدید غم و غصہ اظہار کیا ہے۔اس حوالے سے عوامی و سماجی حلقوں نے ن لیگ کے منتخب مقامی نمائندوں کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا 2013کی طرح ضمنی انتخابات میں بھی ن لیگ نے اپنی روش نہیں بدلی جھوٹے وعدوں اور دعوں کے باوجود اپنے دور اقتد میں حلقے کو محرومیوں کے سوا کچھ نہ دیا۔ٹوٹے روڈ، ناقص سیوریج سسٹم،بنیادی سہولیات سے محروم حلقہ اپنی مختلف انداز میں منتخب ہونے ایم پی اے کی کارکردگی کا منہ بولتا ثبوت ہے،جو کہ حلقے کی عوام سے ساتھ ظلم و نا انصافی ہے۔عوامی حلقوں کا مزید کہنا تھا کہ ضمنی الیکشن پی پی 23میں ن لیگی قیادت نے عوام سے بے شمار ترقیاتی کاموں کے وعدے کئے۔لیکن الیکشن میں واضع اکثریت حاصل کرنے کے بعد عوامی مسائل سے منہ موڑ لیا گیا ہے جس کی وجہ سے حلقے کی عوام بنیادی سہولیات تک سے محروم ہیں ۔مزید کہنا تھاکہ الیکشن میں کئے گئے بلند و بانگ دعوے ایفاء تو ہوئے نظر نہیں آتے البتہ تعریفی بیانات اخبار ات کی زینت بنتے رہے ہیں اورتعریفی بیانات لگوانا محبوب مشغلہ بن چکا ہے،مگراب تک حلقہ کی عوام کو صرف کھلی آنکھوں کے خوابوں کے سوا کچھ نصیب ہوا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں