523

برادریوں کے فیصلے پارٹیوں پر مقدم ہیں، کنویں کی مینڈک بنے رہنے کی بجائے کھلے میدان میں اترنے کا فیصلہ کرلیا ہے،پریشر گروپ کی لاوہ میں پریس کانفرنس

لاوہ(خصوصی رپورٹ:حفیظ اﷲ اعوان)برادریوں کے فیصلے پارٹیوں پر مقدم ہیں، کنویں کی مینڈک بنے رہنے کی بجائے کھلے میدان میں اترنے کا فیصلہ کرلیا ہے، الگ الگ مار کھاتے کھاتے بوڑھے ہوگئے اب وڈیرہ شاہی سسٹم سے علاقہ کو نجات دلائیں گے،نوابزادہ زاہد مبارز، ملک اسد علی خان ڈھیرمونڈ،ملک اسد کوٹگلہ کی لاوہ میں دھماکے دار پریس کانفرنس۔

تفصیلات کے مطابق متحدہ برادری پینل المعروف پریشر گروپ نے نوابزادہ ملک زاہد مبارز خان کے ڈیرہ پر پریس کانفرنس کا اہتمام کیا گیا جہاں سابق رہنما پاکستان تحریک انصاف نوابزادہ ملک زاہد مبارز، سابق ممبر ایگزیٹو باڈی پاکستان مسلم لیگ(ن)ملک اسد علی خان ڈھیرمونڈ، سابق ضلعی صدر پاکستان مسلم لیگ(ق) ملک اسد کوٹگلہ، سردار افضل ٹمن،سردار امجد الیاس،سکندر،سردار امیر خان، آصف اعوان ایڈوکیٹ،ملک جہانگیر، سردار تیمور اکبر،ملک مظفر خان، محمد نواز دھولر،،عثمان اکبر،زاہد پٹواری، ملک غلام جعفر،میاں غلام حسین، فتح شیر، ملک ظفر علی خان لاوہ، ملک زعیم عباس لاوہ، نثار خان، ملک شیر ڈہوک پٹھان، ملک تنزیل، یار محمد، ملک عظمت حیات، حاجی مقصود، شاہد، ملک زمرد چیئرمین جبی، ملک نجف خان، میاں مہر محمد چیئرمین ملتان خورد، قاضی مختیار، ملک غلام شبیرسمیت مقامی لوگوں نے شرکت کی۔اس موقع پر پریس کانفرنس سے خطاب اور صحافیوں کے سوالات کے جواب میں نوابزادہ ملک زاہد مبارز،ملک اسدعلی خان ڈھیرمونڈ،ملک اسدکوٹگلہ نے کہا کہ برادریوں کے فیصلے پارٹیوں پر مقدم ہیں ہم بطور برادری الگ الگ مارکھاتے رہے ہیں جبکہ اب برادری کا اتحاد قائم کرکے علاقہ کی فلاح و بہبود کیلئے میدان میں اٹھ کھڑے ہوئے ہیں ہم مزید کنویں کی مینڈک نہیں بننا چاہتے نوابزادہ زاہد مبارز نے کہا میں نے ڈیڑھ سال قبل ہی علاقہ کے لوگوں سے معافی مانگ لی تھی کہ جو منفی سیاست کا حصہ رہا اب صاف ستھری اصولوں پر مبنی سیاست کا آغاز کر دیا ہے وڈیرہ شاہی،ظلم و جبر کو جڑ سے ختم کریں گے۔ہر ووٹر کی عزت نفس کے محافظ بن کر میدان میں نکلیں گے اور علاقہ کو محرمیوں میں دھکیلنے والوں کا کڑا احتساب کریں گے۔ہمارا اتحاد قومی سطح کا اتحاد ہے۔برادری کے متحدہ پلیٹ فارم سے اہل اور صاف ستھرا امیدوار سامنے لائیں گے قومی و صوبائی حلقوں پروڈیرہ شاہی نظام کا ڈٹ کر مقابلہ کریں گے ۔تلہ گنگ اور لاوہ کے عوام کے ساتھ جن میگا پروجیکٹ کا وعدہ کیا گیا تھا وہ بھی نہ مل سکے جبکہ یہاں ٹیکنیکل کالج،ہسپتال ،تلہ گنگ ضلع،تلہ گنگ میانوالی روڈ ون وے ،سی پیک سے علاقہ کی محرومی سمیت تمام قرضوں کا کڑا احتساب لیں گے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں