540

حافظ عمار یاسر کی نواز شریف پر تنقید چاند پر تھوک پھینکنے کے مترادف ہے ، تحصیل سطح کے سیاست دان حافظ عمار یاسر نواز شریف کو چور اور جھوٹاکہنے کی سے پہلے اپنا گریبان بھی جھانک کر دیکھ لیں.ملک اجمل اعوان

تلہ گنگ ( نمائندہ بے نقاب ) پاکستان مسلم لیگ ن کے ممبر مرکزی کونسل اور مرکزی رہنما ملک اجمل اعوان نے کہا کہ حافظ عمار یاسر کی نواز شریف پر تنقید چاند پر تھوک پھینکنے کے مترادف ہے ایک تحصیل سطح کے سیاست دان حافظ عمار یاسر نواز شریف کو چور اور جھوٹاکہنے کی سے پہلے اپنا گریبان بھی جھانک کر دیکھ لیں کہ ۲۰۱۳ کے انتخابات سے

کچھ دن قبل تلہ گنگ اور موضع جات میں لائے گئے گیس پائپ کہاں گئے جب پرویز الہی ڈپٹی وزیراعظم تھے اس وقت کیوں انہیں تلہ گنگ کے موضع جات میں گیس لگانے کی ہمت نا ہوئی عمار یاسر پنجاب کے سب سے بڑے ڈاکو جنہوں نے پنجاب بنک کو لوٹا کے سیاسی پیروکار ہیں اور نواز شریف قومی لیڈر ہیں اور عمار یاسر کی سیاست کا محور ایک تحصیل تک محدود ہے عماریاسر یہ بتانا پسند کریں گے کہ پچھلے دونوں انتخابات میں وہ عوام کا ضمیر کس کی جمع پونجھی پر خریدنے کی کوشش کرتے رہے ہیں انکے لیڈر چودھری برادران تو وہ محسن کش ہیں جن کی حکومت کے دوران چودھری ظہور الہی کے محسن نواب اکبر خان بگٹی کو شہید کیا گیا تو یہ دو لفظ اظہار تعزیت کے بھی نا کہہ سکے انھی کے دور میں لال مسجد کو شہید کیا گیا خود کش دھماکے بھی انھی کا تحفہ ہے اس وقت ججوں کو نظر بند کرنے والے آج ججوں کی حمایت میں اٹھ کھڑے ہوئے ہیں ا سوقت چودھری برادران اور عمار یاسر کیوں خاموش رہے حافظ عمار یاسر نے اپنی دکانداری کے لئے تلہ گنگ میں نت ہاوس بنانے کی کوشش کی لیکن عوام نے انکی دو بار یہ کوشش ناکام بنا دی انھوں نے مزید کہا کہ عمار یاسر اپنی حیثیت کے مطابق اپنی ٹانگیں پھیلایں نواز شریف ایک نظریہ ، سوچ اور تاریخ بن چکا ہے جو انکے کہنے سے مسخ نہیں ہوسکتی مسلم لیگ ن کا مقابلہ کسی سیاسی جماعت سے نہیں بلکہ سٹیبلشمنٹ سے ہے عمار یاسر کے گاڈ فادر پہلے بھی نواز شریف کو سیاست سے آوٹ کرنے کی ناکام کوشش کر چکے ہیں اور اب بھی یہ کوشش کامیاب نہیں ہو گی نواز شریف پر تنقید کرنے سے پہلے عمار یاسر پنجاب بنک کا حساب تو دے دیں اور بلوچستان کے عوام سے نواب اکبر خان بگٹی کی شہادت پر معافی مانگیں نواز شریف جہاں جایں گے عوام انکا ساتھ دیں گے نواز شریف کا بیانیہ ووٹ کو عزت دو اس وقت ہر پاکستانی کے دل کی آواز ہے اور یہ تحریک ضرور کامیاب ہو گی جس نے روکنا ہے روک لے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں