512

سابق ایم این اے سردار منصور حیات ٹمن کی دوبارہ پاکستان مسلم لیگ (ن) میں واپسی کا خیر مقدم کرتا ہوں اور ن لیگ کی مرکز ی قیادت کے فیصلے کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں، ملک سلیم اقبال

چکوال( شفیق ملک سے ) پاکستان مسلم لیگ(ن) کے بزرگ راہنما اور سابق مشیر وزیرا علی پنجاب ملک سلیم اقبال نے کہا ہے کہ سابق ایم این اے سردار منصور حیات ٹمن کی دوبارہ پاکستان مسلم لیگ (ن) میں واپسی کا خیر مقدم کرتا ہوں اور ن لیگ کی مرکز ی قیادت کے فیصلے کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں کہ انہوں نے سردار منصور حیات ٹمن جیسے سیاست دان کی پارٹی میں واپسی کو

ممکن بنایا،وہ ڈیرہ سلطان پرپریس کلب چکوال کے وفد سے بات چیت کر رہے تھے، وفد میں چیئرمین تحصیل پریس کلب چکوال محمد شفیق ملک اور چوہدری عمران قیصرعباس شامل تھے۔ سابق مشیر ملک سلیم اقبال کا مزید کہنا تھا کہ مسلم لیگ (ن) کی مرکزی اور مقامی قیادت سے دھوکہ کرنے والوں کی اب پارٹی میں کوئی گنجائش نہیں اور نہ ہی پارٹی کو مشکل وقت میں چھوڑ جانے والے مامے سردار ممتاز خان ٹمن اور بھانجے سردار فیض ٹمن کو اب ن لیگ میں قبول کیا جائے گا، ایک سوال کے جواب میں ملک سلیم اقبال نے بتایا کہ سردار منصور حیات ٹمن دوستوں اور پارٹی قیادت کو دھوکہ دینے والوں میں نہ پہلے شامل ہیں اور نہ آنے والے وقت میں ایسا کریں گے جیسا سردار محمد فیض ٹمن نے ضمنی الیکشن میں پارٹی کو دھوکہ دیا ہے، سردار فیض ٹمن کو اگر پیسوں کی ضرورت تھی تو ہم سے رابطہ کرتا ہم ایسے لوگوں کو ان کی اوقات کے مطابق دیتے رہتے ہیں،اب ق لیگ میں اس کی اور سردار غلام عباس کی جو عزت ہے وہ کسی دن کسی عزیز کو خفیہ طریقے سے ق لیگ کے کسی عوامی اجلاس میں بھیج کے دیکھ لیں ،سردار عباس سمیت جس بھی شخص نے ن لیگ کو چھوڑا ہے ن لیگ کو فرق نہیں پڑا مگر چھوڑنے والا ہیرو سے زیرو بن گیا، ایک سوال کے جواب میں ان کا مزید کہنا تھا اگراین اے 65کے ضمنی الیکشن میں ن لیگ کا امیدوار ہوتا تو یہاں سے ایم این اے ہوتا، انہوں نے کہا کہ میرے قریبی ساتھیوں کو مختلف ٹھیکوں کی الاٹ منٹ کی آڑ میں دباؤ ڈال کر حکمران اپنے امیدوار کی حمایت کے لیے مجبور کرتے رہے ہیں لیکن این اے65کا زرلٹ حکمران جماعت کی د و ماہ کی نااہلی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں