348

تحصیل تلہ گنگ و لاوہ کے دیہاتوں میں مرغوں کی لڑائی پر جوئے کاگھناونا کاروبار عام۔مقامی انتظامیہ خاموش تماشائی

تلہ گنگ (نمائندہ بے نقاب)تحصیل تلہ گنگ و لاوہ کے دیہاتوں میں مرغوں کی لڑائی پر جوئے کاگھناونا کاروبار عام ہو گیا۔مقامی انتظامیہ خاموش تماشائی کا کردار ادا کرنے لگ گئی۔ عوامی و سماجی حلقوں کا اعلی حکام سے فوری نوٹس لینے کی اپیل۔

تفصیلات کے مطابق مقامی انتظامیہ کی عدم چشم پوشی کی وجہ سے نوجوانوں اور کئی کم سن بچوں کے مستقبل داو پر لگ چکے ہیں۔ کئی نوجوان اور کمسن بچوں کو جوئے اور حرام کمائی کی لت لگ چکی ہے۔تلہ گنگ ولاوہ کے مختلف دیہاتوں میں مرغوں کی لڑائیوں کر جوئے کا کاروبار عام ہوچکا ہے۔ دن دہاڑے جاری اس کاروبار کی وجہ سے کئی گھر انے اجڑنے کا خدشہ ہے۔ عوامی و سماجی حلقون نے کاروائی کا مطالبہ کیا ہے۔ خصوصی سروے کے دوران عوامی و سماجی حلقوں کا کہنا تھا کہ چند مفاد پرستوں کی وجہ سے نوجوانوں اور کمسن بچوں کے مستقبل خراب ہو گئے ہیں۔ مقامی انتظامیہ کی کھلی چھٹی ہونے کی وجہ سے اس کاروبار نے معصوم بچوں کو حرام کی کمائی کی طرف راغب کر دیا ہے۔جوئے پر لگائے جانے والی رقم کے حصول پر گھروں سے چوریاں عام ہو چکی ہیں۔ عوامی حلقوں کا مزید کہنا تھا کہ بچے پڑھائی کی طرف توجہ دینے کی بجائے مرغے رکھنا شروع کر دیئے ہیں۔ جن پر ہزاروں روپے خرچ کر دیئے جاتے ہیں.عوامی وسماجی حلقوں نے اعلی حکام سے اپیل کی ہے کہ کھلے عام ہونے والے جوئے کے اس کاروبار میں موجود مافیا کے خلاف فوری کاروائی کی جائے۔اس مکروہ دھندہ کرنے والوں کے خلاف سخت سے سخت کاروائی کی جائے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں