352

پیشہ ور بھکاریوں کی بھرمار سیکورٹی رکس بن گیا۔چوری۔سٹریٹ کرائم،اور ڈکیتی،کی وارداتوں میں اضافہ، کاروائی کا مطالبہ

تلہ گنگ (نمائندہ بے نقاب) پیشہ ور بھکاریوں کی بھرمار سیکورٹی رکس بن گیا۔چوری۔سٹریٹ کرائم،اور ڈکیتی،کی وارداتوں میں اضافہ ہونے کے خدشات عوامی وسماجی حلقوں کا قانوں نافذکرنے

والے اداروں سے فوری کاروائی کا مطالبہ۔تفصیلات کے مطابق انتظامیہ کی چشم پوشی کی وجہ سے تحصیل تلہ گنگ و لاوہ پیشہ ور بھکاریوں کی وجہ سے سیکورٹی رکس بن چکا ہے۔شہر بھر اور ان کے گردونواح میں بے خوف خطر دندناتے بھکاریوں کی وجہ سے چوری،ڈکیتی اور سٹریٹ کرائم اضافہ ہو گیا ہے۔بھیک مانگنے کے لئے لوگوں کے گھروں اوردوکانوں میں داخل ہو کر قیمتی اشیاء کا صفایا کر دیا جاتا ہے۔ سروے کے دوران عوامی و سماجی حلقوں کا کہنا تھا کہ انتظامیہ کی طرف سے بھکاریوں کوکھلی چھٹی کی وجہ سے لوگوں کی جان،مال داؤ پر لگ چکی ہیں۔پیشہ ور بھکاری بھیک مانگے کے لئے گھروں میں داخل ہو جاتے ہیں اورسادہ لوح افرادکو بے وقوف بنا کرلوٹ لیا جاتا ہے۔ان کے خلاف کاروائی نہ ہونے کی وجہ سے علاقہ بھر میں سٹریٹ کرائم،چوری،اور ڈکیتی کی واردتوں میں اضافے کے خدشات ہیں ۔مزید کہا کہ مناسب قانون نہ ہونے کی وجہ سے تحصیل تلہ گنگ و لاوہ کے کئی بڑے زمینداروں نے ان بھکاریوں کو اپنی زمینوں پر کام کاج کرنے کے لئے رکھا ہوا ہے جو کہ سرا سر غیر قانونی ہے۔ عوامی و سماجی حلقوں نے اے ایس پی تلہ گنگ اکرام اللہ اور اعلی حکام سے اپیل کی ہے کہ ان پیشہ وار بھکاریوں کے خلاف فوری کاروائی کی جائے اور ان کو کام کاج کی خاطر اپنی جگہیں فراہم کرنے والے زمینداروں کے خلاف نیشنل ایکشن پلان کے تحت کاروائی کی جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں